Ranchi Jharkhand

رمضان میں زیادہ وقت عبادت میں گزاریں: ماجدہ پروین

رانچی: رمضان کے دوران خواتین پر کام کا بوجھ بڑھ جاتا ہے یہ ہم کہہ سکتے ہیں کہ اس مہینے کے دوران وہ عام دنوں کی نسبت زیادہ مصروف رہتی ہیں۔ بچوں اور بڑوں کی ترجیحات کو مدنظر رکھتے ہوئے سحری اور افطاری کا اہتمام کرنا بہت مشکل ہے لیکن عورت گھر کی اس ذمہ داری کو عزت اور شان کے ساتھ نبھاتی ہے۔ اس مہینے میں کھانا بنانے کا مزہ ہی کچھ اور ہے۔ سحری اور افطاری کے لیے طرح طرح کے پکوان تیار کیے جاتے ہیں۔ گھر کا کام کرنے کے بعد وہ دن میں پانچ وقت نماز کے لیے وقت نکالتی ہیں۔ دن میں قرآن پاک کی تلاوت کرنا۔ اس پورے رمضان میں کم از کم دو تین بار قرآن مجید ختم کرنا ہوتا ہے۔ اس کے بعد بھی عورت، مرد اور بچے سب اس مبارک مہینے کا انتظار کرتے ہیں اور اس کا تہہ دل سے استقبال کرتے ہیں۔ خواتین رمضان میں اپنے دن رات کیسے گزارتی ہیں؟ وہ دن میں پانچ وقت نماز بھی پڑھتی ہے۔ روزے اور نماز کے ساتھ ساتھ اپنا کام بھی بخوبی انجام دیتی ہیں۔ ماجدہ پروین نے بتایا کہ روزہ فرض ہے۔ اسے رکھنا ضروری ہے۔ روزہ کی وجہ سے کام میں کبھی کوئی پریشانی نہیں ہوتی۔ وہ بچپن سے روزے رکھتی ہے۔ یہ کہتی ہیں کہ الحمدللہ میرا گھرانا دینی گھرانا ہے۔ میرے دو دو بھائی مفتی ہیں۔ بقیہ سبھی بھائی جان سے زیادہ مانتے ہیں، میرے ہر خواہش کو پورا کرتے ہیں‌۔ اللہ تعالی میرے گھروالوں کو اور میرے والدین کو لمبی عمر صحت دے۔
ماجدہ پروین گھریلو خاتون رانچی

Leave a Response